مفتی تقی عثمانی

ارتقائے فہم و دانش، مفتی تقی عثمانی

حضرت والد ماجدؒ نے تقریباً 1950ء میں ایک موقع پر جلسۂ عام سے خطاب کرتے ہوئے یہ بات فرمائی تھی۔ "پاکستان بننے کے بعد درحقیقت نہ ہمیں علی گڑھ کی ضرورت ہے، نہ ندوہ کی ضرورت ہے، نہ دارالعلوم دیوبند کی ضرورت ہے،  بلکہ ہمیں ایک تیسرے نظامِ تعلیم کی ضرورت ہے جو ہمارے اَسلاف …

ارتقائے فہم و دانش، مفتی تقی عثمانی Read More »

جمہوریت، مفتی تقی عثمانی کی نظر میں

"اسلام کا نظام سیاسی ڈیمو کریسی اور ڈکٹیٹر شپ سے جدا ہے۔ گویا جمہوریت الگ ہے اور اسلامی نظام الگ ہے اس کا اُس سے کوئی تعلق نہیں”۔ فتح الملہم ، ص 284 ج 3 مغربی جمہوریت جس کی بنیاد "عوام کی حکمرانی” کے تصور پر ہے، اسلام کے قطعی خلاف ہے ، کیونکہ اسلام …

جمہوریت، مفتی تقی عثمانی کی نظر میں Read More »

error: Content is protected !!