سربراہ مملکت کے حقوق

سربراہ مملکت کے رعایا پہ دو حق بنیادی طور پہ واجب ہیں۔

” ایک یہ کہ اس کی اطاعت کی جائے اور دوسرا یہ کہ اس کی مدد کی جا ئے، جب تک کہ اس کی حالت میں تبدیلی نہ آئی ہو”۔ (احکام ماوردی صفحہ ۱۷،احکام لابی یعلی صفحہ ۲۸)

اس قانون کے تحت ہر ایک مسلمان امیر کا وزیر ہے۔ امیر کے حقوق جن کا ادا کرنا ہر مسلمان پہ واجب ہیں، درج ذیل ہیں۔

  1. امیر کی ظاہر اور پوشیدہ دونوں حالتوں میں خیرخواہی کرنا۔
  2. اس کی مدد کرنا۔
  3. دل وجان سے اس کی تابعداری کرنا۔
  4. اس کا احترام کرنا۔
  5. سچی بات سمجھانا اور غلطیوں پر متنبہ کرنا۔
  6. اس کو سازشیوں سے باخبر رکھنا۔
  7. اس کو حکام اور عمال کے طرز عمل سے با خبر رکھنا۔
  8. عوامی بہبود کے کاموں میں اس کی مدد کرنا۔
  9. لوگوں کو اس کی امداد اور اس سے محبت کرنے پرآمادہ کرنا۔
  10. زبان،مال اورعمل سے اس کا دفاع کرنا ۔

Leave a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

error: Content is protected !!