اثاثہ جات کی تفصیل – Wealth Statement

حکومت کبھی کبھار حکم دیتی ہے کہ ٹیکس دہندگان، جائیداد و دولت کے گوشوارے wealth statement یعنی اثاثوں کی تفصیلات جمع کروائیں، یہ سلسلہ اب مستقل کردیا گیا ہے۔ اسلامی معاشی نظام کے نفاذ کے بعد اثاثوں کی تفصیلات ہر پاکستانی شہری ہرسال زکوۃ کی ادائیگی کے وقت جمع کروایا کرے اور اس کیلئے وہ اپنی آمدن/اخراجات اور بچت کا حساب کتاب خود رکھے گا۔ اس طرح سےحکومت کو فرد واحد سے لیکر، ضلع، صوبہ اور پاکستان کی سطح تک کل اثاثہ جات کا حساب کتاب بھی رکھنا آسان ہوگا۔ انھی تفصیلات کی بنیاد پہ زکوۃ اکٹھی کی جائے گی۔ جو صاحب نصاب نہیں وہ بھی بے روزگار الاؤنس لینے کیلئے اپنے اثاثہ جات کی تفصیلات دے۔ ان تفصیلات کو جمع کروانے کا پہلے سے ہی آن لائن سسٹم ایف بی آر کے پاس موجود ہے۔ اس کو بہتر اور موثر کرکے فائدہ اٹھایا جاسکتا ہے۔ حکومت کسی کی بھی آمدن و اثاثوں کا جائزہ لے سکتی ہے۔

Leave a Comment

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

error: Content is protected !!